بحرین میں شیعہ علماء کونسل کے صدر کی گرفتاری

بحرین میں شیعہ علماء کونسل کے صدر کی گرفتاریمقدس دفاع نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، بحرین کے ٹیلی ویژن چینل اللؤلؤه کی رپورٹ کے مطابق بحرین کی پولیس نے ایسے میں  شیعہ علماء کونسل کے صدر سید مجید مشعل کو گرفتار کیا کہ تا حال ان کی گرفتاری کی وجہ نہیں بتائی گئی۔ بحرین کی عدالت نے اس معروف عالم دین کو ڈھائی سال جیل میں قید و بند کی صعوبتیں برداشت کرنے کے بعد رہا کیا تھا۔

 شیعہ علماء کونسل کے صدر سید مجید مشعل کو 2016 میں دراز کے علاقے میں دھرنے دئیے جانے کی وجہ سے ڈھائی سال قید کی سزا سنائی گئی تھی۔

بحرین میں فروری دوہزار گیارہ سے عوامی تحریک جاری ہے - بحرینی عوام اپنے ملک میں سیاسی اصلاحات، آزادی اور جمہوریت کا مطالبہ کررہے ہیں۔ بحرینی حکومت نے اس عرصے میں سعودی عرب کے ساتھ مل کر عوام کی جائز جد وجہد کو فوجی طاقت کے ذریعے کچلنے کی کوشش کی ہے جس کے دوران سیکڑوں بحرینی شہری شہید اور زخمی ہوئے ہیں جبکہ آل خلیفہ حکومت نے بہت سے سیاسی مخالفین کی شہریت منسوخ کردی ہے اور ہزاروں عام شہریوں کو مظاہروں میں شرکت کے جرم میں جیلوں میں ڈال دیا ہے۔

پیغام کا اختتام/