اپ ڈیٹ: 06 July 2022 - 20:01
سعودی عرب کے ولیعہد محمد بن سلمان کے بھائي بندر بن سلمان نے شاہی گارڈ کے افسر کو ولیعہد محمد بن سلمان کو قتل کرنے کے لئے 10 ملین ریال دیئے تھے لیکن محمد بن سلمان نے اپنے بھائی کے قاتلانہ حملے کوناکام بنادیا ۔
خبر کا کوڈ: ۵۰۹۳
تاریخ اشاعت: 13:38 - February 16, 2022

سعودی عرب کے ولیعہد محمد بن سلمان اپنے بھائی کے قاتلانہ حملے میں بال بال بچ گئےمقدس دفاع نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق صہیونی اخبار مکور ریشون نے فاش کیا ہے کہ سعودی عرب کے ولیعہد محمد بن سلمان کے بھائي بندر بن سلمان نے شاہی گارڈ کے افسر کو ولیعہد محمد بن سلمان کو قتل کرنے کے لئے 10 ملین ریال دیئے تھے، لیکن سعودی ولیعہد محمد بن سلمان نے اپنے بھائی کے قاتلانہ حملے کوناکام بنادیا ۔ صہیونی اخبـار کے مطابق محمد بن سلمان قاتلانہ حملے میں بچ گئے۔ مختلف ذرائع کے مطابق بھائی کے قاتلانہ حملے کو ناکام  بنانے کے بعد ولیعہد محمد بن سلمان نے اپنے بھائی بندر بن سلمان کو گرفتار کرلیا ہے۔ صہیونی اخبار کے مطابق بندر بن سلمان نے شاہی گارڈ کے ایک افسر کو ولیعہد محمد بن سلمان کو قتل کرنے کے لئے 10 ملین ریال دیئے تھے ، اس کا مطلب یہ ہے کہ سعودی عرب کے شاہی خاندان میں کسی بھی وقت قبائلی جنگ شروع ہوسکتی ہے۔ محمد بن سلمان نے شاہی گارڈ کے افسر اور بھائی دونوں کو گرفتار کرنے کے بعد اپنی سکیورٹی میں اضافہ کردیا ہے۔ سعودی عرب میں ولیعہد محمد بن سلمان کے خلاف  بیشمار لوگ ہیں جن میں بڑی تعداد میں سعودی شہزادے بھی شامل ہیں۔

آپ کا تبصرہ
نام:
ایمیل:
* رایے:
مقبول خبریں