اپ ڈیٹ: 11 November 2019 - 13:28
ایمنسٹی انٹرنیشنل نے کہا ہے کہ سعودی عرب میں سزائے موت پر عمل درآمد بین الاقوامی قوانین کی کھلی خلاف ورزی ہے۔
خبر کا کوڈ: ۳۸۴۵
تاریخ اشاعت: 20:37 - April 24, 2019

سعودی عرب میں لوگوں کے سر قلم کئے جانے پر ایمنسٹی انٹرنیشنل کا ردعملمقدس دفاع نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، ایمنسٹی انٹرنیشنل نے اعلان کیا ہے کہ سعودی عرب میں سزائے موت پر سرقلم کرکے عمل درآمد سے اس بات کی نشاندہی ہوتی ہے کہ سعودی حکام انسانوں کی زندگی کو کوئی اہمیت نہیں دیتے اور وہ  سزائے موت  کو اپنے مخالفین اور شیعہ اقلیتی مسلمانوں کی سرکوبی کے لئے ایک حربے کے طور پر استعمال کرتے ہیں۔

سعودی عرب کی وزارت داخلہ نے منگل کے روز سزائے موت کے حکم پر عمل کرتے ہوئے سینتیس افراد کے سرقلم کردئے جانے اعلان کیا تھا  -

رپورٹوں سے پتہ چلتا ہے کہ ان افراد کے ملاء عام میں سر قلم کئے گئے ہیں۔

واضح رہے کہ سعودی عرب کی آل سعود حکومت نے رواں سال میں ایک سو چار افراد کے سزائے موت کے سرقلم کئے ہيں ۔

پیغام کا اختتام/

آپ کا تبصرہ
نام:
ایمیل:
* رایے: