اپ ڈیٹ: 11 November 2019 - 13:28
اقوام متحدہ میں شام کے مستقل مندوب بشار الجعفری نے عرب علاقوں پر صیہونی حکومت کے قبضے کو علاقے میں بدامنی کی سب سے بڑی وجہ قرار دیا ہے۔
خبر کا کوڈ: ۲۸۴۶
تاریخ اشاعت: 20:49 - October 19, 2018

مشرقی سعودی عرب کے مسلمانوں پر آل سعود کے مظالممقدس دفاع نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، شامی مندوب نے سلامتی کونسل کے اجلاس میں کہا کہ شام، مقبوضہ جولان کے علاقے میں صیہونی حکومت کے اقدامات کی شدید مذمت کرتا ہے۔

بشار الجعفری نے امریکی سفارت خانے کی تل ابیب سے مقبوضہ بیت المقدس منتقلی اور یہودی ملک کے قانون جیسے اقدامات کو بھی جو فلسطینیوں کے حقوق کو اہمیت نہیں دیتا، سختی کے ساتھ مسترد کر دیا۔

اقوام متحدہ میں شام کے مستقل مندوب نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کی قرارداد تینتیس چودہ کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ اس قرارداد کی بنیاد پر غاصبانہ قبضے کے مقابلے میں خاموشی اختیار کرنے والے ممالک، دیگر قوموں اور ملکوں پر ہونے والی جارحیت میں شریک ہیں۔

واضح رہے کہ جولان کا علاقہ ایک ایسا پہاڑی علاقہ ہے جو شام میں واقع ہے اور شام کے صوبے قنیطرہ کا ایک حصہ ہے۔یہ علاقہ دمشق سے صرف ستّر کلومیٹر کے فاصلے پر واقع ہے اور اس علاقے پر غاصب صیہونی حکومت نے سن انّیس سو سڑسٹھ سے قبضہ کر رکھا ہے۔

پیغام کا اختتام/

آپ کا تبصرہ
نام:
ایمیل:
* رایے:
مقبول خبریں