اپ ڈیٹ: 10 July 2019 - 08:54
یمن کی اسلامی تحریک انصار اللہ کے سریکریٹری جنرل نے کہا ہے کہ سخت دباو کے باوجود دشمن اور غاصبوں کے سامنے ہتھیار نہیں ڈالیں گے
خبر کا کوڈ: ۲۷۱۴
تاریخ اشاعت: 11:24 - October 05, 2018

دشمن اور غاصبوں کے سامنے ہتھیار نہیں ڈالیں گے: الحوثیمقدس دفاع نیوز ایجنسی کی بین الاقوامی رپورٹر رپورٹ کے مطابق، یمن کی اسلامی تحریک انصار اللہ  کے سربراہ عبد الملک الحوثی نے کہا ہے کہ امریکہ ،سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات یمن سے حاصلہ قدرتی ذخائر کو لوٹ رہے ہیں اور یمنی عوام کی دولت اور ثروت پر امریکہ، سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات قبضہ کرنا چاہتے ہیں لیکن ہم ملک و قوم کو بچانے کے لئے اس شیطانی مثلث کا بھر پور مقابلہ کریں گے اور ان کے ناپاک عزائم اور منصوبوں کو ناکام بنادیںگے۔

عبدالملک الحوثی نے کہا کہ ہم کسی طاغوتی طاقت کو اپنے اوپر مسلط ہونے کی اجازت نہیں دیں گے اور ہم سعودی عرب اور امارات کا ڈٹ کر مقابلہ کریں گے ۔ دشمن نے مغربی ساحل کے محاذ پربڑی تعداد میں اپنی فوجیں جمع کی ہیں  اور وہ الحدیدہ صوبہ پر قبضہ کرنے کا ناپاک منصوبہ بنا رہے ہیں لیکن یمنی عوام دشمن کے اس ناپاک منصوبے کو ناکام بنادیں گے۔ الحوثی نے کہا کہ امن اور صلح کی کوششوں کے ساتھ ساتھ ملک اور قوم کا دفاع بھی جاری رکھیں گے ۔

واضح رہے کہ سعودی عرب نے امریکا اور اسرائیل کی حمایت  سے اور اتحادی ملکوں کے ساتھ مل کر چھبیس مارچ دوہزار پندرہ سے یمن پر وحشیانہ جارحیتوں کا سلسلہ شروع کر رکھا ہے ۔ اس دوران سعودی حملوں میں دسیوں ہزار یمنی شہری شہید اور زخمی ہوئے ہیں جبکہ دسیوں لاکھ یمنی باشندے اپنے گھر بار چھوڑنے پر مجبور ہوئے ہیں ۔

یمن کا محاصرہ جاری رہنے کی وجہ سے یمنی عوام کو شدید غذائی قلت اور طبی سہولتوں اور دواؤں کے فقدان کا سامنا ہے ۔

 سعودی عرب نے غریب اسلامی ملک یمن کی بیشتر بنیادی تنصیبات اسپتال اور حتی مسجدوں کو بھی منہدم کردیا ہے -

پیغام کا اختتام/

آپ کا تبصرہ
نام:
ایمیل:
* رایے:
مقبول خبریں