اپ ڈیٹ: 11 November 2019 - 13:28
علمدار کربلا حضرت ابوالفضل العباس علیہ السلام کا جشن ولادت پوری دنیا بالخصوص کربلائے معلی میں بہت ہی جوش و خروش کے ساتھ منایا جا رہا ہے۔
خبر کا کوڈ: ۱۲۸۲
تاریخ اشاعت: 3:56 - April 22, 2018

لشکرحسینی کے عظیم علمبردار کا جشن ولادتمقدس دفاع نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، اسلامی جمہوریہ ایران،عراق، پاکستان، ہندوستان، لبنان، شام اور دنیا کے مختلف ملکوں سے دسیوں لاکھ زائرین کربلائے معلی اور نجف اشرف پہنچے ہیں جو اس عظیم الشان جشن میں شریک ہیں - کربلائے معلی میں مختلف ملکوں کے زائرین اور عاشقان اہل بیت عصمت و طہارت اپنے اپنے مخصوص انداز میں علمدار کربلا حضرت ابوالفضل العباس علیہ السلام کے حرم، بین الحرمین اور اسی طرح حضرت امام حسین علیہ السلام کے حرم میں جشن منا رہے ہیں - ہندوستان اور پاکستان کے معروف شعرائے کرام بھی علمدار کربلا حضرت ابوالفضل العباس علیہ السلام کے حضور نذرانہ عقیدت پیش کر رہے ہیں -

قمربنی ہاشم حضرت ابوالفضل العباس علیہ السلام چار شعبان المعظم چھبیس ہجری قمری کو مدینہ منورہ میں پیدا ہوئے - آپ کے معروف القاب قمر بنی ہاشم ، علمدار کربلا غازی اور باب الحوائج ہیں۔ ان کے علاوہ بھی آپ کے بہت سے القاب ہیں جو آپ کی عظیم المرتبت شخصیت کی عکاسی کرتے ہیں -

حضرت ابوالفضل العباس علیہ السلام نے واقعہ عاشورہ میں ایسا بے مثال کارنامہ سرانجام دیا کہ حق شناسی اور وفاشعاری میں پوری دنیا کے لئےمثال بن گئے ۔ انہوں نے اپنے ایثار و فداکاری اور غیرمعمولی وفا کے ذریعے امام وقت سے اپنے عشق و عقیدت کا اس طرح سے اظہار کیا جس کی مثال قیامت تک نہیں مل سکتی- آپ نے اپنے اس کردار سے مسلمانوں کو یہ پیغام دیا کہ سخت سے سخت حالات میں بھی امامت وولایت کی پیروی سب سے اولین ترجیح ہے -

حضرت عباس میدان کربلا میں لشکرحسینی کے عظیم علمبردار ، شجاعت کے منادی اور سپاہ اخلاص وشہادت کے سردارتھے - حضرت ابوالفضل العباس علیہ السلام نے واقعہ عاشورا میں دین اسلام کی حفاظت اور بقا کے لئے جو بے مثال کارنامہ انجام دیا وہ تاریخ کے دامن میں سنہری حروف میں درج ہے- آپ نے واقعہ کربلا سے پہلے بھی اپنے پدربزرگوار حضرت علی علیہ السلام کے ہمراہ مختلف جنگوں میں کفر و نفاق کا مقابلہ کیا اور اسلام کی پاسداری کی-ایران میں حضرت ابوالفضل العباس علیہ السلام کے یوم ولادت با سعادت کو یوم جانباز کا نام دیا گیا ہے۔

اس پرمسرت موقع پر اسلامی جمہوریہ ایران بھی سراپا جشن و نور و سرور ہے - ایران میں مقدس مقامات، مساجد امامبارگاہوں سڑکوں عمارتوں اور دوکانوں کو برقی قمقموں سے سجایا گیا ہے اور لوگ جگہ جگہ مٹھائیاں اور شربت تقسیم کر رہے ہیں جبکہ مساجد، امامبارگاہوں اور مقدس مقامات میں محفل میلاد کا سلسلہ جاری ہے -

اس سلسلے کا مرکزی جشن مشہد مقدس میں حضرت امام رضاعلیہ السلام کے حرم مطہر میں منایا جا رہا ہے جہاں ایران اور دنیا کے دیگر ملکوں کے لاکھوں کی تعداد میں زائرین موجود ہیں قم میں حضرت فاطمہ معصومہ سلام اللہ علیہا کے روضہ اطہرمیں بھی محفل جشن جاری ہے جس میں بڑی تعداد میں زائرین اور پیروان اہلبیت شریک ہیں -

پاکستان اور ہندوستان میں بھی سرکار وفا حضرت ابوالفضل العباس کی ولادت کا جشن انتہائی جوش و عقیدت کے ساتھ منایا جا رہا ہے ۔

کل تین شعبان المعظم  کوحریت پسندوں کے سید و سالار حضرت امام حسین علیہ السلام کا یوم ولادت باسعادت تھا۔ آج چار شعبان المعظم علمدار کربلا حضرت ابوالفضل العباس علیہ السلام کا یوم ولادت باسعادت ہے اورکل پانچ شعبان المعظم کو واقعہ کربلا کے مبلغ و پیغام رساں حضرت امام زین العابدین علیہ السلام کا یوم ولادت باسعادت ہے اس مناسبت اور مبارک موقع پر سحر عالمی نیٹ ورک اپنے تمام ناظرین، سامعین اور چاہنے والوں کو دل کی گہرائیوں سے ہدیہ تبریک و تہنیت پیش کرتا ہے۔

پیغام کا اختتام/

آپ کا تبصرہ
نام:
ایمیل:
* رایے:
مقبول خبریں