اپ ڈیٹ: 10 July 2019 - 08:54
کابل میں امریکی فوجیوں کی بکتر بند گاڑی سے کچل کر دو افغان شہری ہلاک ہوگئے
خبر کا کوڈ: ۱۲۸۰
تاریخ اشاعت: 3:04 - April 22, 2018

امریکی فوجی گاڑی سے کچل کر دو افغان شہری ہلاکمقدس دفاع نیوز ایجنسی کی بین الاقوامی رپورٹر رپورٹ کے مطابق، مقامی ذرائع کا کہنا ہے کہ امریکی فوج کی بکتر بندگاڑیاں دو افغان شہریوں کو کچل کر جن میں ایک عورت اور ایک مرد تھا کوئی پروا کئے بغیر اپنا راستہ جاری رکھتے ہوئے آگے بڑھ گئیں -

یہ واقعہ اس وقت پیش آیا جب امریکی فوج کی یہ بکتر بندگاڑیاں مخالف سمت کی جانب جانب رہی تھیں -

ہلاک ہونے والے افغان  شہریوں میں سے ایک پرائیویٹ یونیورسٹی میں پروفیسر اور دوسرا افغان وزارت دفاع کا ملازم تھا -

ابھی تک افغان سیکورٹی حکام نے اس سلسلے میں کوئی بیان نہیں دیا -

امریکی فوجیوں کا یہ غیر انسانی اقدام اس بات کو ظاہر کرتا ہے کہ امریکا کے نزدیک انسانی جانوں کی کوئی قدر و قیمت نہیں ہے - افغانستان میں امریکی فوجیوں کے ہاتھوں اسلامی مقدسات کی توہین ، مساجد پر یلغار ، قرآن کریم کو آگ لگانا ، عام شہریوں کے گھروں پر رات کے وقت حملہ اور عام شہریوں کا قتل عام ایک معمول کی بات ہے جس کی وجہ سے امریکا کے تئیں افغان عوام میں شدید غم و  غصہ پایا جارہا ہے.

پیغام کا اختتام/
آپ کا تبصرہ
نام:
ایمیل:
* رایے:
مقبول خبریں