اپ ڈیٹ: 10 July 2019 - 08:54
حزب اللہ لبنان کے ڈپٹی سیکریٹری جنرل نے علاقے میں امریکی پالیسیوں کی ناکامی اور اسرائیل کی حمایت جاری رکھنے میں اس کی ناتوانی کو شام سے امریکی فوج کے انخلا کی وجہ قرار دیا ہے۔
خبر کا کوڈ: ۳۲۳۲
تاریخ اشاعت: 23:19 - December 22, 2018

شام سے فوجوں کی واپسی امریکی شکست ہے، حزب اللہ لبنانمقدس دفاع نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، شیخ نعیم قاسم نے جمعرات کو جنوبی بیروت میں شہید سمیرالقنطار کی تیسری برسی کے پروگرام سے خطاب میں شام سے امریکی فوج کے انخلا کے اعلان کی طرف اشارہ کیا اور یہ بات زور دے کر کہی کہ امریکہ کا یہ اعلان مضحکہ خیز ہے اس لئے کہ امریکہ اور اس کے اتحادی ہی داعش گروہ کی تشکیل کے ذمہ دار ہیں اور اس گروہ کی وہ ہر طرح کی مدد و حمایت بھی کرتے رہے ہیں۔

حزب اللہ لبنان کے ڈپٹی سیکریٹری جنرل نے تاکید کے ساتھ کہا کہ شامی فوج، عراق کی عوامی رضاکار فورس، عراقی عوام، حزب اللہ لبنان اور اسلامی جمہوریہ ایران نیز استقامت و مزاحمت کے محور نے عراق، شام اور علاقے پر داعش دہشت گردوں کی حکمرانی کا خاتمہ کر دیا۔

انھوں نے اسرائیل کے مقابلے میں استقامت کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ سازباز کے عمل سے مسئلہ فلسطین ہرگز حل نہیں ہو سکتا اس لئے کہ سینچری ڈیل کے تحت بیت المقدس کو اسرائیل کے سپرد کئے جانے کا منصوبہ تیار کیا گیا ہے جبکہ فلسطینیوں کی وطن واپسی کے حق کو بھی نظرانداز کیا گیا ہے اور فلسطین کے نام پر کچھ چھوڑا نہیں گیا ہے۔

پیغام کا اختتام/

آپ کا تبصرہ
نام:
ایمیل:
* رایے:
مقبول خبریں