اپ ڈیٹ: 10 July 2019 - 08:54
اقوام متحدہ میں تعینات سوئڈن کے مستقل مندوب نے کہا ہے ایرانی صدر کے دو یورپی ملک سوئٹزرلینڈ اور آسٹریا کے دورے جوہری معاہدے کو تحفظ فراہم کرنے کے لئے موثر اور مفید ثابت ہوں گے.
خبر کا کوڈ: ۱۷۵۳
تاریخ اشاعت: 10:06 - July 03, 2018

ایرانی صدر کا دورہ یورپ جوہری معاہدے کیلئے موثر ثابت ہوگا: سوئڈش مندوبمقدس دفاع نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، انہوں نے مزید کہا کہ ڈاکٹر روحانی کا دورہ یورپ باہمی مفاہمت کو بہتر بنانے بالخصوص جوہری معاہدے کو بچانے کے لے مثبت ثابت ہوگا.

انہوں نے کہا کہ یورپی ممالک ایران جوہری معاہدے کے حق میں ہین اور ہماری کوشش ہے کہ اس عالمی معاہدے کو تحفظ فراہم کریں.

سوئڈش مندوب نے مزید کہا کہ ایران جوہری معاہدہ سلامتی کونسل سے تصدیق شدہ اور دنیا میں تخفیف اسلحہ معاہدے کے بہتر نفاذ کے لئے ایک عالمی معتبر سند ہے.

انہوں نے کہا کہ عالمی امن و سلامتی کو برقرار رکھنے کے لئے ایران جوہری معاہدہ ناگزیر ہے. یاد رہے کہ صدر مملکت ڈاکٹر حسن روحانی گزشتہ روز سرکاری دورے پر سوئٹزرلینڈ کے شہر زیورخ پہنچ گئے.\

ایرانی صدر اس دورے کے بر آسٹریا جائیں گے. یہ بات قابل ذکر ہے کہ جوہری معاہدے سے امریکی علیحدگی کے بعد صد روحانی کا یہ یورپ کا پہلا دورہ ہوگا.

ڈاکٹر روحانی کے سوئٹزرلینڈ اور آسٹریا کا دورہ دو روزہ ہوگا.

پیغام کا اختتام/

آپ کا تبصرہ
نام:
ایمیل:
* رایے:
مقبول خبریں