اپ ڈیٹ: 10 July 2019 - 08:54
آل سعود خاندان سے جدا ہونے والے ایک شہزادے نے کہا ہے کہ محمد بن سلمان کے خودسرانہ اقدامات کی وجہ سے شاہی خاندان میں شدید غم و غصہ پایا جاتا ہے اسی لئے محمد بن سلمان کے خلاف بغاوت یقینی ہے اس کے لئے صرف وقت کا انتظار ہے۔
خبر کا کوڈ: ۱۷۰۱
تاریخ اشاعت: 22:55 - June 27, 2018

محمد بن سلمان کے خلاف بغاوت یقینی ہے، ایک سعودی شہزادے کا بیانمقدس دفاع نیوز ایجنسی کی بین الاقوامی رپورٹر رپورٹ کے مطابق، سعودی شہزادے خالد بن فرحان نے، جنھوں نے جرمنی میں پناہ لے رکھی ہے اور جو سوشل میڈیا پر کافی سرگرم ہیں، سعودی ولیعہد محمد بن سلمان کے اقدامات اور پالیسیوں اور خاصطور پر فلسطینی عوام کے خلاف امریکا کی مخاصمانہ پالیسیوں کو آگے بڑھانے اور سینچری ڈیل کو عملی جامہ پہنانے کے تعلق سے ان کی کوششوں پرشدید تنقید کی ہے-

انہوں نے کہا کہ اسرائیل کے ساتھ تعلقات کو مستحکم بنانے کے لئے سینچری ڈیل کو عملی جامہ پہنانے کے لئے محمد بن سلمان کی عجلت صرف اس لئے ہے کہ وہ امریکا کی غلامی کر کے ہر حال میں سعودی عرب کے تخت شاہی پر بیٹھنا چاہتے ہیں-

دوسری جانب ایک صیہونی اخبار نے لکھا ہے کہ چار عرب ملکوں سعودی عرب، متحدہ عرب امارات، مصر اور اردن نے فلسطین کے خلاف امریکی سازشی منصوبے سینچری ڈیل کو قبول کر لیا ہے-

پیغام کا اختتام/

آپ کا تبصرہ
نام:
ایمیل:
* رایے:
مقبول خبریں